کشن گنگا ڈیم : عالمی بینک نے پاکستانی شکایت مسترد کر دی

ویب ڈیسک – عالمی بینک نے سندھ طاس معاہدے اور کشن گنگا ہائیڈرو منصوبے پر پاکستان کی شکایات کو ناکافی قرار دے دیا۔

عالمی بینک کے سینیر عہدے داروں نے پاکستانی وفد کے ساتھ پیر اور منگل کے روز اجلاس کیے جس میں پاکستان نے عالمی ادارے کو اپنے خدشات سے آگاہ کیا۔

عالمی بینک کے منگل کے روز کہا ہے کہ اس نے پاکستانی وفد سے دریائی پانی پر اپنے ہمسایہ ملک بھارت کے ساتھ تنازع کے دوستانہ حل کے سلسلے میں مذاکرات کیے ۔

سزا دی گئی تو معافی مانگوں گا نہ رحم کی اپیل

غیر ملکی میڈیا کے مطابق بات چیت میں سندھ طاس معاہدے کے دائرے میں رہتے ہوئے مسئلے کے پُرامن حل کے مواقع پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا لیکن پاکستانی وفد سے ملاقات تنازع کے حل کیلئے کسی طریقہ کار پر اتفاق رائے کے بغیر ختم ہوگئی۔

پاکستانی وفد اٹارنی جنرل اشتراف اوصاف علی کی قیادت میں اتوار کے روز واشنگٹن پہنچا تھا، جب کہ اس سے ایک روز قبل بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی نے بھارتی کنٹرول کے کشمیر میں متنازع ڈیم کا افتتاح کیا تھا۔

پاکستان کو خدشہ ہے کہ اس منصوبے سے ملک میں آنے والے پانی میں اس کا حصہ کم ہو جائے گا۔

عالمی بینک نے عشروں پہلے پاکستان اور بھارت کے ساتھ پانی کی تقسیم سے متعلق مذاكرات کی سرپرستی کی تھی لیکن حالیہ اجلاسوں میں پیش کیے گئے حقائق پر عالمی بینک کا کہنا ہے کہ اس سلسلے میں پیدا ہونے والے اختلافات اور تنازعوں کے حوالے سے اس کا کردار بہت محدود ہے۔

source