مستقبل کے گورنر سندھ عمران اسماعیل پر مزار قائد کے دروازے بند

ویب ڈیسک – تحریک انصاف کے رہنما اور مستقبل کے ہونے والے سندھ کے گورنر عمران اسماعیل کو 14 اگست کے روز قائد اعظم کے مزار میں داخلے کی اجازت نہ مل سکی، عمران اسماعیل مرکزی دروازے سے ہی فاتحہ پڑھ کر واپس ہو لئے۔

تفصیلات کے مطابق عمران اسماعیل دیگر پی ٹی آئی رہنماؤں کے ہمراہ مزار قائد پر حاضری کے لئے پہنچے تو انتظامیہ نے انہیں اندر داخل نہ ہونے دیا۔ عمران اسماعیل، حلیم عادل شیخ، فروس شمیم نقوی، خرم شیر زمان اور دیگر پی ٹی آئی رہنما دروازے پر کھڑے رہے۔

نامزد وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ اور پی پی اراکین مزارقائد میں پروٹوکول کے ساتھ موجود تھے۔ اس صورتحال پر عمران اسماعیل نے شدید برہمی کا اظہار کیا اور مطالبہ کیا کہ پیپلزپارٹی اپنے پروٹوکول کوتبدیل کرے، چالیس گاڑیاں لا کر روڈ بند نہیں کرنا چاہیے۔

دوسری طرف مزار قائد کی انتظامیہ نے کہا ہے کہ عمران اسماعیل کو داخلے سے نہیں روکا گیا انہیں کچھ دیر انتظار کرنے کو کہا گیا تھا مگر وہ برہم ہو گئے اور واپس چلے گئے۔