کس کے سر سجے گا وزارت اعظمیٰ کا تاج، عمران خان اور شہباز شریف کے درمیان آج مقابلہ

ویب ڈیسک – کون پہنے گا وزارت اعظمیٰ کا تاج اس کا فیصلہ آج شام تک ہو جائے گا۔ وزارت اعظمیٰ کی کرسی کے لئے چئیرمین تحریک انصاف عمران خان اور مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کے درمیان مقابلہ ہو رہا ہے۔ شہباز شریف پہلی مرتبہ قومی اسمبلی آئے ہیں جبکہ عمران خان کی 22 سالہ جدوجہد کا آج آخری امتحان ہے۔

عمران خان کی جماعت تحریک انصاف کی پوزیشن اس وقت ایوان میں بہت مضبوط ہے۔ سپیکر اور ڈپٹی سپیکر کے انتخابات کے دوران پی ٹی آئی نے بھرپور سیاسی قوت کا مظاہرہ کیا اور پیپلزپارٹی اور ایم ایم اے کے امیدواروں کو شکست دی۔

دوسری جانب مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کے لئے ایوان میں حالات کچھ سازگار نہیں ہیں۔ انتخابات 2018 کے اپوزیشن کے بنے اتحاد میں داڑ پڑ چکی ہے۔ پیپلزپارٹی نے واضح طور پر شہباز شریف کو ووٹ دینے سے انکار کر دیا ہے۔ پیپلزپارٹی کے شریک چئیرمین آصف علی زرداری کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ وہ آج ایوان میں شریک ہی نہیں ہو گے۔

پیپلزپارٹی کے بعد جماعت اسلامی نے بھی وزارتِ عظمیٰ کے لیے مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کو ووٹ نہ دینے کا اعلان کر دیا۔ جماعت اسلامی کے ترجمان نے کہا ہے کہ پارٹی کے واحد رکن قومی اسمبلی مولانا عبد الاکبر چترالی وزارتِ عظمیٰ کے کسی بھی امیدوار کو ووٹ نہیں دیں گے۔