کراچی : تحریک انصاف کے وفاقی وزیر علی محمد مہر حملے میں زخمی

کراچی (ویب ڈیسک) پاکستان کے معاشی ہب کراچی میں تحریک انصاف کے وفاقی وزیر اور سابق وزیراعلیٰ سندھ سردار علی محمد مہر کے گھر ڈاکووٴں نے حملہ کر دیا۔ حملے کے دوران مزاحمت کرتے ہوئے وفاقی وزیر شدید زخمی ہو گئے،۔ ڈاکووٴں نے بندوق کے بٹ مار کر سردار علی محمد مہر کا سر پھاڑ دیا اور انہیں تشدد کا نشانہ بھی بنایا۔،

میڈیا رپورٹس کے مطابق سابق وزیر اعلیٰ سندھ علی محمد مہر کے گھر پر ڈکیتی کی واردات ہوئی۔ واردات کے دوران علی محمد مہر نے مزاحمت کی کوشش کی تو ڈاکووٴں نے انہیں شدید تشدد کا نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں وفاقی وزیر شدید زخمی ہو گئے۔ڈکیتی کی  واردات کراچی کے علاقے گزری میں موجود سابق وزیر اعلیٰ کے گھر پر ہوئی۔علی محمد مہر گزشتہ الیکشن میں آزاد امیدوار کی حیثیت سے گھوٹکی سے ایم این اے منتخب ہوئے اور بعدازاں انہوں نے پی ٹی آئی میں شمولیت اختیار کر لی تھی۔

علی محمد مہر کو زخمی حالت میں ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔سابق وزیراعلیٰ سندھ ڈکیتی کی واردات کے دوران مزاحمت کرنے پر زخمی کر دیے گئے۔ جبکہ بروقت کارروائی کرتے ہوئے انہیں ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔جہاں علی محمد مہر کی حالت خطرے سے باہر ہے۔