بیماری پیچیدہ؟ لندن میں ڈاکٹر لارنس سے بھی مشاورت، نواز شریف کے علاج کے حوالے سے اہم فیصلہ متوقع

لاہور – سابق وزیراعظم نوازشریف کی صحت کے حوالے سے ان کے ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان نے لاہور میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے قوم کو آگاہ کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ نوازشریف کا مکمل چیک اپ کیا جا رہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق نوازشریف کے ذاتی معالج ڈاکٹرعدنان نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نوازشریف کا علاج پاکستان میں  ہوسکتا ہے یا نہیں، یہ کہنا قبل ازوقت ہے۔ انہوں نے کہا کہ لندن میں نوازشریف کے معالج ڈاکٹر لارنس سے مشاورت کی جا رہی ہے۔

سابق وزیراعظم نواز شریف دوسری بار میڈیکل چیک اپ کے لیے شریف میڈیکل سٹی کمپلیکس پہنچے تھے جہاں ڈاکٹرز نے ڈھائی گھنٹے تک ان کا طبی معائنہ کیا تھا. ڈاکٹروں نے مسلم لیگ( ن) کے قائد نوازشریف کو ادویات جاری رکھنے اور مکمل آرام کا مشورہ دیا تھا۔

یاد رہے کہ نوازشریف کو گزشتہ ہفتے طبی بنیادوں پر 6 ہفتے کے لئے ضمانت پر رہا کیا گیا تھا جس کے بعد وہ اپنی مرضی سے کہیں بھی اپنا علاج کروا سکتے ہیں تاہم سابق وزیراعظم ملک چھوڑے کر نہیں جا سکتے۔