ملک سے ڈیپارٹمنٹل کرکٹ کا خاتمہ، آفریدی، حفیظ، جنید خان بے روزگار ہو گئے

ویب ڈیسک ۔پاکستان میں کرکٹ کے ڈھانچے میں تبدیلی نے بڑے بڑے پاکستانی ٹیسٹ کرکٹرز کو بے روزگار کر دیا ہے۔ وزیراعظم عمران خان کے ملک میں دیپارٹمنٹل کرکٹ کو ختم کرنے کے اعلان کے فوری بعد ہی بڑے بڑے بینکوں اور اداروں نے اپنی اپنی کرکٹ ٹیموں کو ختم کر کے اپنے پاس نوکری کرنے والے کرکٹرز کو برخاست کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق ڈومیسٹک کرکٹ میں تبدیلی کے بعد سب سے پہلے حبیب بنک نے اپنی کرکٹ ٹیم کو ختم کر دیا جس سے حبیب بنک میں نوکری کرنے والے کرکٹر بے روز گار ہو گئے ہیں۔ بے روزگار ہونے والے کھلاڑیوں میں شاہد آفریدی، احمد شہزاد، عمر اکمل، امام الحق، جنید خان اور فہیم اشرف شامل ہیں۔

خیال رہے کہ کچھ روز قبل یہ خبر منظر عام پر آئی تھی کہ وزیراعظم عمران خان نے پی سی بی کے ریجنز اور ڈپارٹمنٹس کو اکھٹے کرنے کا پلان مسترد کر دیا ہے۔

وزیراعظم عمران خان ملک بھر میں آسٹریلیا کی طرز پر علاقائی ٹیموں کے بڑے حامی ہیں اور ملک سے ڈیپارٹمنٹل کرکٹ کو ختم کرنے کا عزم وہ ملکی سربراہ بننے سے پہلے بھی کئی مرتبہ کر چکے تھے۔