حکومت کو رہنے دیا تو پاکستان کو 100 سال پیچھے چلا جائے گا، وقت آگیا ہے حکمرانوں کو ایوانوں سے نکالا جائے: آصف علی زرداری

گڑھی خدا بخش ۔ سابق وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو کی برسی کے موقع پر پاکستان پیپلز پارٹی نے گڑھی خدا بخش میں ایک بڑا سیاسی اجتماع کیا اور تحریک انصاف کی حکومت کے خلاف طبل جنگ بجاتے ہوئے حکمرانوں کو ایوانوں سے نکالنے کا اعلان کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق 4 اپریل کو پیپلزپارٹی کے بانی اور سابق وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو کی برسی کے موقع پر ملک بھر سے جیالے گڑھی خدا بخش میں بھٹو خاندان کے مزار پر پہنچے۔ اس موقع پر پیپلزپارٹی کی اعلیٰ قیادت بھی موجود تھی۔ عوامی اجتماع سے سابق صدر آصف علی زرداری اور چئیرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو نے خطاب بھی کیا۔

آصف علی زرداری نے کہا کہ ہ کارکن تیاری کرلیں اب ان لوگوں کو اقتدار سے نکالنے کا وقت آگیا، ملک کی بہتری کے لیے اس حکومت کا خاتمہ ضروری ہے  اس لیے ان  لوگوں کو گھر بھیجنے کے سوا کوئی طریقہ نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ  اگر ہم نے حکومت کو رہنے دیا تو یہ پاکستان کو 100 سال پیچھے لے جائیں گے۔

سابق صدر کا مزید کہنا تھا کہ ، ہم چاہے جیل میں ہوں یا باہر ،ان کو حکومت سے نکال کررہیں گے،کارکن تیاری کرلیں ، اسلام آباد کی طرف مارچ کریں گے ،سڑکوں پر رہیں گے اوراس حکومت کے خاتمے تک واپس نہیں آئیں گے۔ان کا کہنا تھا کہ  سلکیٹڈحکومت تو کہا کہ اس کو 18 ویں ترمیم کے خاتمے کے لیے لایا گیا ہے، اب وزیراعظم خود بھی پھٹ پڑا ہے کہ خزانہ خالی ہے۔

آصف علی زرداری نے وزیراعظم عمران خان پر طنز کے نشتر برساتے ہوئے کہا کہ م ان کی طرح نہیں کریں گے کہ جس طرح یہ کنٹینروں پر بیٹھ کر کرتے تھے ،شام کوگھر جاتے  اور صبح واپس آجاتے تھے ،ہم سڑکوں پر ہی بستروں پر بیٹھیں گے اور ان کونکال کر واپس آئیں گے ۔