آئندہ ہفتے پاکستان پر بھرپور حملہ؟ بھارت کی جانب سے بڑا جواب آگیا

ویب ڈیسک – گزشتہ روز پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے دعویٰ کیا تھا کہ بھارت پاکستان پر ایک بڑے حملے کی تیار کر رہا ہے اور وہ اس کے پلوامہ کی طرز پر پہلے ایک ڈرامہ رچائے گا جسے بنیاد بنا کر پاکستان پر جارحیت کی جائے گی۔

وزیرخارجہ نے باقارہ حملے کی تاریخ بھی واضح کرتے ہوئے خبردار کیا کہ بھارے 16 سے 20 اپریل کے درمیان کی بھی وقت حملہ کر سکتا ہے۔ تاہم اب بھارت کی جانب سے ممکنہ جارحیت پر بھارت نے وضاحتی بیان دے دیا ہے۔

بھارت نے  جواب دیتے ہوئے کہا کہ ہم پاکستان پر حملے کی تیاری نہیں کر رہے۔ بھارتی وزارت خارجہ کے ترجمان نے پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی پریس کانفرنس کے فوری بعد اپنے ردعمل میں کہا کہ بھارت پاکستان پر حملے کی تیاری نہیں کر رہا ، ہم شاہ محمود قریشی کے بیان کو مسترد کرتے ہیں۔یاد رہے کہ گذشتہ روز وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انکشاف کیا تھا کہ بھارت 16 سے 20 اپریل کے درمیان پاکستان پر حملہ کر سکتا ہے۔

بھارت پاکستان پر حملہ کرنے کے لیے خود مقبوضہ کشمیر میں پلوامہ جیسا ایک اور حملہ بھی کر سکتا ہے۔ اگر ایسا ہوا تو خطے پر اس کے کیا اثرات مرتب ہوں گے اس کا اندازہ خود لگایا جاسکتا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہمارے پاس قابلِ بھروسہ معلومات ہیں بھارت دوبارہ ایسا کر سکتا ہے۔ ہمارے پاس مصدقہ انٹیلی جنس ہے کہ بھارت ایک اور حملے کی منصوبہ بندی کر رہا ہے۔