کراچی سمندر میں کیکڑا ویل سے ڈیڑھ ارب بیرل کے برابر خام تیل اور گیس دریافت ہونے کے امکانات روشن: عالمی تحقیقاتی ادارہ ریسٹیڈ

ویب ڈیسک – کراچی کے سمندر میں کئی ماہ سے جاری ڈرلنگ کے حوالے جہاں اچھی خبریں گردش کرتی رہی ہیں وہیں یہ افواہیں بھی تواتر کے ساتھ آتی رہیں کے شاید ڈرلنگ کرنے والی کمپنیوں کو ناکامی کا منہ دیکھنا پڑے۔ تاہم اس حوالے سے اب مثبت خبریں آنا شروع ہو گئی ہیں جس کی مثال عالمی تحقیقاتی ادارےریسٹیڈ کی حالیہ رپورٹ ہے۔

تفصیلات کے مطابق المی تحقیقاتی ادارے ریسٹیڈ نے اپنی تازہ ترین رپورٹ میں کہا ہے کہ پاکستان میں تیل اورگیس کی دریافت3 بڑی ممکنہ دریافتوں میں شامل ہے، سمندر میں کیکڑا ویل سے توانائی وسائل کے روشن امکانات ہیں، کیکڑا ویل سے ڈیڑھ ارب بیرل کے برابر خام تیل اور گیس دریافت ہوسکتی ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق عالمی سطح پر تحقیق کرنے والے ادارے ریسٹیڈ انرجی نے اعلامیہ جاری کیا ہے جس میں بتایا ہے کہ پاکستان سے سمندر میں تیل اورگیس کی دریافت دنیا کی3 بڑی ممکنہ دریافتوں میں شامل ہے۔

تیل و گیس کی دیگر2 بڑی ممکنہ دریافتیں میکسیکو کے 2.7 ارب بیرل اور برازیل میں  5.3 ارب بیرل متوقع ہیں۔ پاکستان سمندر میں کیکڑا ویل سے توانائی وسائل کے روشن امکانات ہیں۔ کیکڑا ویل ڈیڑھ ارب بیرل خام تیل کے برابر دریافت ہوسکتی ہے۔