بلوچستان میں دہشت گردی، مکران کوسٹل ہائی وے پر 14 مسافروں کو بس سے اتار کر قتل کر دیا گیا

کوئٹہ (ویب ڈیس)  صوبہ بلوچستان ایک بار پھر دہشت گردی کا شکار ہو گیا۔ مکران کوسٹل ہائی وے پر پیش آئے تازہ دہشت گردی کے واقعے میں 14 مسافروں کر بس سے اتار کر گولیاں مار دی گئیں۔ عینی شاہدین کے مطابق مسافروں کو شناختی کارڈ چیک کرنے کے بعد گولیاں ماری گئیں۔

تفصیلات کے مطابق بلوچستان میں دہشت گردی کا ایک افسوسناک واقعہ پیش آیا جس میں  اورماڑہ کے قریب مکران کوسٹل ہائی وے پر 14 افراد کو بس سے اتار کر قتل کر دیا گیا۔ مسافروں کو شناختی کارڈ دیکھنے کے بعد مارے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔

پولیس کے مطابق رات 2 بجے کے قریب مسلح افراد نے کوسٹل ہائی وے پر بس کو روکا اور 14 مسافروں کو بس سے اتار کر ہاتھ باندھ کر قتل کیا، 5 سے 6 کے درمیان مسلح افراد تھے۔ نقاب پوش ملزمان نے شناخت کے بعد مسافروں کو قتل کیا۔

پولیس کے مطابق مقامی لوگ ڈرے ہوئے ہیں اور معلومات دینے سے گھبرا رہے ہیں۔ پولیس اور لیویز نے علاقے کو گھیرے میں لیکر سرچ آپریشن شروع کر دیا۔

یاد رہے کہ اس سے قبل بھی بلوچستان میں مسافروں کو بسوں سے اتار کر قتل کیا جاتا رہا ہے۔ اس سے قبل کے واقعات میں جن مسافروں کو نشانہ بنایا جاتا رہا ہے۔