کرپشن الزامات میں گرفتاری کا خوف، پیرو کے سابق صدر نے خود کو گولی مار کر زندگی کا خاتمہ کر لیا

ویب ڈیسک – کرپشن الزامات میں گرفتاری اور بدنامی کے خوف سے بچنے کی خاطر پیرو کے سابق صدر ایلن گارسیا نے خود کنپٹی میں گولی مار کر زندگی کا خاتمہ کر لیا۔ ایلن گارسیا پر برازیلی تعمیراتی کمپنی کو ٹھیکوں کے وعض رشوت لینے کے الزامات تھے۔

تفصیلات کے مطابق لاطینی امریکہ کے ملک پیرو کو سابق صدر ایلن گارسیا نے عین اس وقت خود کو گولی مار کر زندگی کا خاتمہ کر لیا جب پیرو کی پولیس انہیں کرپشن الزامات میں گرفتار کرنے کے لئے ان کے گھر پہنچی تھی۔ سابق صدر نے گرفتاری اور بدنامی سے بچے کی خاطر انتہائی قدم اٹھایا۔

ایلن گارسیا 1985 سے 1990 اور 2006 سے 2011 تک پیرو کے صدر رہ چکے تھے ان پر اپنے دور حکومت میں برازیل کی تعمیراتی کمپنیوں کو ملک میں ٹھیکے دینے کے عوض بھاری رشوتیں وصول کرنے کا الزام تھا۔

ایلن گارسیا نے عین اس وقت خود کو گولی ماری جب پولیس انہیں گرفتار کرنے ان کے گھر پہنچی، ایلن کو شدید زخمی حالت میں ہسپتال منتقل کیا گیا تاہم وہ جانبر نہ ہو سکے۔