پاکستان کی ورلڈکپ تیاریوں کو دھچکا، خون میں ہیپاٹائٹس سی کا وائرس، لیگ سپنر شاداب خان کی ورلڈ کپ میں شرکت مشکوک

ویب ڈیسک ۔ انگلینڈ میں ہونے والے ورلڈ کپ 2019 میں شرکت کے لئے پاکستان کی تیاریوں کو دھچکا لگ گیا، پاکستان کے اہم ترین کھلاڑی لیگ سپنر شاداب خان کے خون میں ہیپاٹائٹس سی کے وائرس کی تصدیق ہو گئی جس کے بعث شاداب کے ورلڈکپ کھیلنے پر سوالیہ نشان لگ گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ ہفتے پاکستان کرکٹ بورڈ نے ورلڈکپ 2019 کے سکواڈ کا اعلان کیا تو ان میں شاداب خان کا نام بھی شامل تھا۔ تاہم اب خبر آئی ہے کہ شاداب خان کے خون میں ہیپاٹائٹس سی کی نشاندہی ہوئی ہے۔

چیف سلیکٹر انضمام الحق نے میڈیا نمائندگان کو بتایا ہے کہ شاداب خان کے بلڈ ٹیسٹ میں وائرس آیا اور انہیں  ایک ماہ مکمل آرام کا مشورہ دیا گیا ہے۔

چیف سلیکٹر نے بتایا کہ شاداب خان کو ورلڈ کپ سکواڈ میں ڈاکٹر کی مشاورت کے بعد رکھا جائے گا۔ انضمام الحق کا کہنا تھا کہ شاداب کی جگہ ورلڈ کپ میں محمد عامر یا آصف علی کو موقع دیا جاسکتا ہے تاہم فی الحال متبادل کھلاڑی کا فیصلہ نہیں کیا گیا۔

یاد رہے کہ انگلینڈ میں ہونے والی چیمپئنز ٹرافی پاکستان ہو جتوانے میں شاداب خان نے اہم کردار ادا کیا تھا اور تب سے ہی لیگ سپنر ٹیم کا اہم حصہ رہے ہیں تاہم ان کے ورلڈکپ میں شرکت نہ کرنے سے پاکستان کو بڑا دھچکا لگ سکتا ہے۔