مذہب تبدیل کرنے سے انکار، بھارتی جیل میں مسلمان قیدی کی پشت پر جلتے لوہے سے ہندو دیوتا کا نام لکھ دیا

ویب ڈیسک ۔ سیکولر بھارت کا بھاینک چہرہ ایک بار پھر بے نقاب، بھارتی جیل میں قید مسلمان قیدی کے مذہب تبدیل نہ کرنے پر دہکتے لوہے سے پشت پر ہندو دیوتا کا نام داغ دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق بھارت کی تیہاڑ جیل میں مسلمان قیدی شبیر کو جیل سپرنٹنڈنٹ راجیش چوہان نے زبردستی ہندو مذہب اختیار کرنے کو کہا انکار پر قیدی شبیر پر بیہمانہ تشدد کیا گیا اور دوروز بھوکا رکھنے کے بعد اس کی پشت پر دہکتے لوہے سے بھارتی دیوتا “اوم” کا نام داغ دیا۔

شبیر کے اہل خانہ جیل سپرنٹنڈنٹ کے تشدد کے خلاف عدالت کا دروازہ کھٹکھٹایا جہاں عدالت نے شبیر کو طلب کرنے کے بعد اس پر تشدد کا نوٹس لیا اور شبیر سمیت تمام مسلمان قیدیوں کی حفاظت کو یقینی بنانے کی ہدایات جاری کر دیں۔