پنجاب میں وکلا گردی، کرسی مار کے جج کا سر پھاڑ دیا، ججز نے ہڑتال کر دی

ویب ڈیسک – ملک بھر میں وکلا کردی کا اضافہ ہوتا جا رہا ہے، ماتحت عدالتوں میں آئے دن وکلا کی جانب سے اپنی مرضی کے فیصلے لینے کی خاطر جج صاحبان کو گالم گلوچ، مار پیٹ اور زدوکوب کرنے کے واقعات میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔

ایسا ہی ایک واقعہ گذشتہ روز پنجاب کے شہر جڑانوالہ میں پیش آیا جہاں وکیل اور جج میں معمولی تلخ کلامی پر وکیل نے کرسی مار کر معزز جج کا سر پھاڑ دیا۔ اس واقعہ کے بعد زخمی جج کو فوری طور پر ہسپتال منتقل کر کے طبی امداد دی گئی۔

گذشتہ روز کے اس واقعہ کے بعد لاہور سمیت پنجاب کی تمام عدالتوں میں جج صاحبان نے وکلا کے نامناسب رویے کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے عدالتی عمل کا بائیکاٹ کر دیا ہے۔ احتجاجی طور پر جج صاحبان نے صرف اہم مقدمات کی سماعت اپنے اپنے چیمبرز میں کی، جبکہ عام سائلین کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

ججز نے سپریم کورٹ اور قانون نافذ کرنے والے اداروں سے اپیل کی ہے کہ انہیں وکلا گردی سے بچایا جائے۔

https://dailynewslounge.com/2019/04/25/12294/