میرا 11 سالہ بیٹا سندھ کے ہسپتال میں طبی امداد نہ ملنے سے جاں بحق ہو گیا: شہلا رضا لائیو شو میں آبدیدہ

ویب ڈیسک ۔ پاکستان پیپلزپارٹی کی رہنما شہلا رضا جو اپنے متنازع بیانات اور رویے کی وجہ سے کافی شہرت رکھتی ہیں نے لائیو ٹی وی شو پر انکشاف کیا کہ ان کا بیٹا سندھ کے ہسپتال میں ابتدائی طبی امداد نہ ملنے کی وجہ سے جاں بحق ہو گیا۔

تفصیلات کے مطابق پیپزپارٹی کی رہنما شہلا رضا نے ایک نجی ٹی وی چینل کے شو پر انکشاف کیا کہ چند برس قبل ان کے دوبچے ایک بیٹا اور بیٹی عید کے تیسرے روز حادثے میں وفات پا گئے تھے۔ انہوں نے انکشاف کیا کہ ان کا 11 سالہ بیٹا جسے زخمی حالت میں ہسپتال لے جایا گیا لیکن طبی امداد نہ ملنے کے باعث وہ بھی وفات پا گیا تھا۔

اپنے بیان پر قائم ہوں، سلمان تاثیر نہ بنایا جائے، شہلارضا حضرت امیر معاویہؓ کیخلاف بیان پر ڈٹ گئیں

شہلا رضا اپنی دکھ بھری داستان سناتے ہوئے آبدید ہ ہو گئیں۔ انہوں نے ہسپتالوں کے قوانین اور نظام پر شدید تنقید کی اور کہا کہ ہسپتالوں کا نظام تبدیل ہونا چاہئے اور زخمیوں کو فوری طور پر طبی امداد دی جانی چاہیئے تاکہ کوئی بھی والدین اس قسم کے حادثے سے دوچار نہ ہوں۔