پاک چین اقتصادی راہداری شراکت داری میں تبدیل ہو چکی: وزیراعظم عمران خان

ویب ڈیسک ۔ چین کی شہر بیجنگ میں ہو رہی دوسری بیلٹ اینڈ روڈ فورم میں شرکت کر رہے پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے چینی صدر اور وزیراعظم سے ملاقات کے دوران کہا ہے کہ پاک چین اقتصادی راہداری اب شراکت داری میں تبدیل ہو رہی ہے، چین پاکستان کے ساتھ ٹیکنالوجی سمیت ہر شعبے میں تعاون کر رہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے بیلٹ اینڈ روڈ فورم میں شرکت کو ایک خوشگوار تجربہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ چین پاکستان راہداری شراکت داری میں تبدیل ہو چکی ہے جب کہ چین ٹیکنالوجی کے شعبے میں پاکستان کے ساتھ تعاون کررہا ہے، ہم چین کی مدد سے سائنس اور ٹیکنالوجی کی شاندار یونیورسٹی قائم کرنا چاہتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ  کہ آئندہ ایک دو سال میں پاکستان ترقی کے اہداف حاصل کر لے گا اور زراعت کے شعبے میں چین کے ساتھ مل کر ترقی کی منازل طے کریں گے،  زراعت کی ترقی پاکستان کی شرح نموکی ضمانت ہو گی، اس شعبےمیں چین کی مدد کیساتھ ترقی کی منازل طے کرینگے، وزیراعظم کا کہنا تھا کہ خیبرپختونخوا میں ایک ارب درختوں کامنصوبہ 5 سال میں مکمل کیا۔ جس سے پاکستان میں بڑھتی ہو ماحولیاتی آلودگی سے نمٹنے میں مدد ملے گی۔

عمران خان نے چینی سرمایہ کاروں کو ملک میں سرمایہ کاری کی دعوت دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان سرمایہ کاری کے لئے ایک محفوظ ملک ہے، ہم چینی سرمایہ کاروں کو پاکستان میں خوش آمدید کہتے ہیں اور انہیں یقین دلاتے ہیں کہ چینی سرمایہ کاروں کو ہر ممکن سہولت اور سیکیورٹی دی جائے گی۔