جہانگیر ترین نے تحریک انصاف کو تقسیم کیا، ان سے ہاتھ ملانا بھی پسند کرتا: سنئیر رہنما پی ٹی آئی حامد خان

ویب ڈیسک ۔ پاکستان تحریک انصاف میں اندرونی اختلافات شدت اختیار کرتے جا رہے ہیں، شاہ محمود قریشی کے جہانگیر خان ترین سے  اختلافات  کی گونج پہت دور تک سنای دی جاتی رہی ہے اور پارٹی کے بانی اراکین میں سنئیر ترین رہنما حامد خان نے بھی جہانگیر ترین کے خلاف مورچہ سنبھال لیا ہے۔

حامد خان نے ایک نجی ٹی وی چینل کے شو پر گفتگو کرتے ہوئے پارٹی چئیرمین عمران خان اور ان کے دوست جہانگیر ترین پر سنگین ترین الزامات لگا دیئے ہیں۔ حامد خان نے کہا کہ اگر میں عمران خان کا وکیل نہ بنتا تو عمران خان تاریخ کا حصہ بن چکے ہوتے۔

انہوں نے الزام عائد کیا کہ جہانگیر ترین نے تحریک انصاف کو تقسیم کیا ہے۔ حامد خان نے کہا کہ جہانگیرترین ترین جیسے لوگ پارٹی کو ہائی جیک کرنے آتے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ عمران خان کو پنجاب میں عثمان بزدار سے بہتر شخص لانا چاہیے تھا۔

حامد خان نے مزید الزامات لگاتے ہوئے کہا کہ جہانگیر ترین کا سیاسی کردار انتہائی افسوسناک رہا ہے، جہانگیر ترین کی وجہ سے پارٹی کے اندر ایک خوف کی فضا ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں جہانگیر ترین سے ہاتھ ملانا بھی پسند نہیں کرتا ۔ جہانگیر ترین کے گناہ بہت زیادہ ہیں لیکن عدالت نے انہیں بہت کم سزا دی۔

پی ٹی آئی رہنما نے عمران خان کو مشورہ دیا کہ جتنی جلدی ہو سکے جہانگیر ترین جیسے لوگوں سے جان چھڑا لی جائے، اگر عمران خان پر مشکل وقت آیا تو جہانگیر ترین جیسے لوگ انہیں تنہا چھوڑ کر نکل جائیں گے۔