بھارتی فوج پر آدم خور برفانی انسان کا خوف طاری، ایسی تصاویر جاری کردیں کہ ہر کوئی دنگ رہ گیا

ویب ڈیسک ۔ بھارتی فوج پر ان دنوں ایک نیا خوف طاری ہو گیا ہے، بھارتی فوج کے مطابق انہیں ہمالیہ کی برفانی پہاڑیوں میں تخیلاتی کردار برفانی انسان “یٹیی ” کے قدموں کے نشان ملے ہیں۔ یہ قدموں کے نشان عام آدمی کے پیر سے کئی گنا بڑے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی فوج کی جانب سے سوشل میڈیا کی ویب سائٹ ٹویٹر پر کچھ تصاویر شئیر کی گئی ہیں جن میں ہمالیہ کی برف پوش پہاڑیوں پر بڑے بڑے قدموں کے نشان دیکھے جا سکتے ہیں،  بھارتی فوج نے دعویٰ  کیا ہے کہ اتنے بڑے قدموں کے نشان ممکنہ طور پر ایک تخیلاتی کردار برفانی انسان ییٹی Yeti کے ہو سکتے ہیں۔  برف پر بنے نقوشِ پا کی لمبائی 32 انچ اور چوڑائی 15 انچ ہے جو ہمالیائی علاقے میں نیپال کے پاس واقع ماکالو فوجی کیمپ کے پاس دیکھے گئے ہیں۔

برف پر قدموں کے یہ نشان دیکھ کر ہمالیہ کی پہاڑیوں پر ڈیوٹی پر موجود بھارتی فوجیوں میں خوف کی سی فضا طاری ہو چکی ہے۔ دوسری جانب سوشل میڈیا پر بھارتی فوج کو تنقید اور مذاق دونوں کا ہی نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ بھارتی افواج کے جس آفیشل ٹویٹر اکاؤنٹ پر یہ تصاویر جاری کی گئیں اس کے فالوور کی تعداد 60 لاکھ سے زائد ہے۔

 

یاد رہے کہ ییٹی ایک تخیلاتی بن مانس نما برفانی انسان کو کہا جاتا ہے جس کا تذکرہ نیپال کی لوک کہانیوں میں اکثر پڑھنے کو ملتا ہے، اکثرں کے مطابق یہ انسان نما برفانی مخلوق ہمالیہ، سائبیریا اور مشرقی ایشیا کے برفیلے علاقوں میں پائی جاتی ہے۔ لیکن اکثر ماہرین کسی بھی ایسی مخلوق کے وجود کو تسلیم کرنے سے انکار کرتے ہیں جسے آج تک کسی انسانی آنکھ نے نہ دیکھا ہو۔