پاکستان میں غیر قانونی موبائل فون بلاک ہونا شروع، پہلے مرحلے میں 30 لاکھ فونز کی باری

ویب ڈیسک – ملک بھر میں پاکستان ٹیلی کوم اتھارٹی (پی ٹی اے) نے غیر قانون طور پر پاکستان لائے گئے موبائل فونز کو بند کرنا شروع کر دیا ہے، ڈھائی کروڑ میں سے پہلے مرحلے میں 30 لاکھ موبائل فون بلاک کئے جائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان بھر میں گزشتہ کئی سال سے کسٹم ڈیوٹی اور دیگر ٹیکسز کے بغیر اسمگلنگ کے ذریعے لائے گئے تھے، تاہم اب آنے والے موبائل فون کے اعدادوشمار کو تمام موبائل فون نیٹ ورک پر اکٹھا کرنے کے بعد ان30 لاکھ سے زائد غیر قانونی موبائل فون کو بند کرنے کا سلسلہ شروع ہو گیا ۔

پاکستان ٹیلی کام اتھارٹی کے ذمہ دار ذرائع نے بتایا ہے کہ بذریعہ میڈیا اور سوشل میڈیا کے ذریعے عوام کو گزشتہ کئی مہینے پہلے سے آگاہ کیا جاتا رہا کہ غیر قانونی موبائل فون نہ خریدیں اور اس کی تصدیق بھی بذریعہ شارٹ کوڈ کے ذریعے کریں،ذرائع نے بتایا ہے کہ ڈھائی کروڑ سے زائد ایسے موبائل فون کا ڈیٹا اکٹھا کیا گیا ہے جس پر کوئی ڈیوٹی ادا نہیں ہوئی اور یہ تمام موبائل فون پاکستان میں غیر قانونی طریقے سے آئے اور مار کیٹو ں میں فروخت ہوئے اب اس کے پہلے مرحلے میں 30لاکھ سے زائد موبائل فون بند ہونے شروع ہوگئے ہیں تمام بند ہونے والے موبائل فون کو گزشتہ کئی مہینے سے بذریعہ ایس ایم ایس آگاہ بھی کیا جاتا رہا ہے کہ وہ قانونی طریقے سے اس کا ٹیکس ادا کریں بس صورت دیگر آپ کے فون کو بند کیا جائے گا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق پاکستان بھر میں بیرون ممالک سے آنے والے کسٹم ڈیوٹی اور دیگر ڈیوٹی کے بغیر آنے والے اربوں روپے کے کروڑوں موبائل فونز بند کرنے سے متعلق گزشتہ روز پی ٹی اے ہیڈ کوارٹر اسلام آباد میں اہم اجلاس ہوا ۔ اجلاس کی صدارت چیئرمین پی ٹی اے نے کی جبکہ پاکستان ٹیلی کام اتھارٹی کے دیگر افسران نے بھی شرکت کی ۔

اتھارٹی ذرائع نے اس بات کی تصدیق کی ہے اجلاس میں دو موبائل فون کمپنیوں کے سربراہوں جبکہ دو کمپنیوں کےنمائندوں نے شرکت کی ہے، اجلاس میں بتایا گیا ہے کہ ابھی پہلے مرحلے میں 30لاکھ سے زائد موبائل فونز بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے جبکہ اس کے بعد دیگر غیر قانونی موبائل فونز کو بند کیا جائے گا۔