اٹھارہویں ترمیم کی وجہ سے وفاق دیوالیہ ہوگیا: وزیراعظم عمران خان

ویب ڈیسک – وزیراعظم پاکستان عمران خان کا کہنا ہے کہ 18ویں ترمیم کی وجہ سے وفاق دیوالیہ ہو گیا ہے، ملک میں پیسے کی کمی نہیں لیکن 18ویں  ترمیم کی وجہ سے صوبے ٹیکس اکٹھا کرنے میں ناکام ہوگئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم ہاوٴس اسلام آباد میں سینئر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ   18ویں ترمیم سے وفاق کو شدید نقصان پہنچا اور وہ دیوالیہ ہو گیا، ان کا کہنا تھا کہ صدارتی نظام کے بارے میں کوئی علم نہیں، مجھے سمجھ نہیں آرہا یہ کہاں سے آ رہا ہے اور کون لا رہا ہے، اس نظام کے لیے سب سے پہلے پارلیمنٹ کو متحد ہونا ہو گا۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ نئے بلدیاتی نظام سے نئی لیڈرشپ سامنے آئے گی، اس نظام کے تحت فنڈز براہ راست گاؤں تک جاتے ہیں، 22 ہزاردیہات میں براہ راست پیسہ جائے گا، پرانے نظام کے تحت مقامی سطح پرزیادہ کرپشن ہوتی تھی۔ شہروں میں ناظم براہ راست منتخب ہوں گے اور وہ اپنی کابینہ خود لائیں  گے جبکہ پنجاب میں پنچائیت کے براہ راست انتخابات ہوں گے،  نئے نظام کے ذریعے ویلیج کونسل کے انتخابات اور تحصیل ناظم کا انتخاب بھی براہ ہو گا۔

عمران خان نے معروف ماہر معاشیات شبر زیدی کو چیئرمین فیڈرل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر) تعینات کرنے کا اعلان بھی کیا۔