گائے سے ’’زیادتی‘‘ کرنے والا رنگے ہاتھوں پکڑا گیا

ویب ڈیسک ۔ ویسے تو بھارتی ہندو گائے کو اپنی ماں اور بھگوان  سمجھتے ہیں لیکن وہاں حالت یہ ہے کہ انسان تو انسان اب جانوروں کی بھی عزت محفوظ نہیں، بھارتی گاوٴں میں ایک شخص گائے کے ساتھ جنسی زیادتی کرتا ہوا رنگے ہاتھوں پکڑا گیا۔ گاوٴں والوں نے خوب درگت بنانے کے بعد پولیس کے حوالے کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق بھارت میں جنسی درندوں نے اپنی گاوٴ ماتا کو بھی نا بخشا اور اپنی ہوس کا نشانہ بنا ڈالا۔  بھارتی ریاست اترپردیش کے شہر ایودھیا میں ایک شخص کو کرتالیہ بابا آشرم کے  رضاکاروں نے گائے بھینسوں کے باڑے میں ایک معصوم گائے کے ساتھ زیادتی کرتے ہوئے رنگے ہاتھوں پکڑ لیا۔

آشرم کے رضا کاروں نے شک گزرنے پر مذکورہ شخص کی ریکی کرنی شروع کر دی اور  سی سی ٹی وی فوٹیج کے ذریعے گائے کے ساتھ جبری زیادتی کرنے والے ہوس کے پجاری کو موقع پر پکڑ لیا۔ آشرم کے رضا کاروں نے ملزم کی خوب درگت بنائی اور اسے پولیس کے حوالے کر دیا جہاں اس کے خلاف بھارتی قانون کے مطابق جانوروں کے ساتھ بد سلوکی کی دفعات 376 اور 511 کے تحت مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔

یاد رہے کہ دنیا کی سب سے بڑی جمہوریت کے دعوے دار بھارت میں جنسی درندگی کے واقعات عام ہیں اور آئے دن کسی نہ کسی خاتون کے ساتھ زیادتیوں کے کیس رپورٹ ہوتے رہتے ہیں۔