آرمی چیف جنرل باوجوہ اور ڈی جی آئی ایس پی آر نے بھی پاکستان اور جنوبی افریقہ کا میچ لارڈز کرکٹ گراوٴنڈ میں دیکھا

لندن ۔ پاکستان کرکٹ ٹیم آج لندن کے تاریخی کرکٹ گراوٴنڈ لارڈز مین اتری تو وہاں ان کی حوصلہ افزائی کرنے پاکستان کے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باوجوہ بھی آگئے۔ ان کے ساتھ ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور ، پاکستانی سکواش لیجنڈ جہانگیر خان اور  برطانوی وزیر خارجہ جیریمی ہنٹ بھی موجود تھے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان نے کرکٹ ورلڈکپ کے ایک انتہائی اہم میچ میں جنوبی افریقہ کو 49 رنز سے شکست دے دی۔ پاکستان کا میچ دیکھنے کے لئے جہاں شائقین کی ایک بڑی تعداد موجود تھی وہیں پاکستان کے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ بھی اپنی ٹیم کے ہمراہ لارڈز کرکٹ گرواٴنڈ میں پاکستانی کرکٹ ٹیم کا حوصلہ بڑھانے آ گئے۔ ان کے ساتھ ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور اورسکواش لیجنڈ جہانگیر خان بھی موجود تھے۔

آرمی چیف کو سٹیدیم میں آتا دیکھ کر پاکستانی شائقین کے جوش و خروش میں اضافہ ہو گیا اور انہوں نے پاکستان زندہ باد اور پاک فوج زندہ باد کے نعرے لگانے شروع کر دیئے۔ لوگوں نے آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس پی آر کے ساتھ سیلفیاں بھی بنوائیں۔

 

یاد رہے کہ پاکستان نے جنوبی افریقہ کو 49 رنز سے شکست دے کو ٹورنامنٹ سے باہر کر دیا۔ پاکستانی فیلڈروں کی بدترین فیلڈنگ کے باوجود باوٴلروں نے پروٹیز بلے بازوں کو کھل کر کھیلنے کا موقع نہ دیا۔ پاکستان نے فیلڈنگ کرتے ہوئے 6 انتہائی آسان کیچ چھوڑے تھے۔

پاکستانی کپتان سرفراز احمد نےٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کی تو قومی بلے بازوں نے کمال دکھایا اور دونوں اوپنرز نے پر اعتماد انداز میں اننگز کا آغاز کیا اور 81 رنز کی شراکت قائم کی۔ محمد حفیظ صرف 20 رنز ہی بناسکے تاہم ون ڈاؤن آنے والے بابراعظم اور حارث سہیل نے شاندار کھیل کا مظاہرہ کیا، دونوں کھلاڑیوں کے درمیان 81 رنز کی شراکت قائم ہوئی جس کے بعد بابراعظم 69 رنز بناکر آؤٹ ہوگئے۔

شعیب ملک کی جگہ ٹیم میں شامل ہونے والے حارث سہیل نے جارحانہ کھیل کا مظاہرہ کیا جب کہ اماد وسیم نے بھی ان کا بھرپور ساتھ دیتے ہوئے 71 رنز کی شراکت قائم کی تاہم اماد وسیم 23 رنز بناکر آؤٹ ہوگئے۔ حارث سہیل نے شاندار کھیل کا مظاہرہ کیا اور صرف 58 گیندوں پر 89 رنز بنائے، حارث سہیل کی جارحانہ اننگز کی بدولت پاکستان نے مقررہ 50 اوورز میں 7 وکٹوں کے نقصان پر 308 رنز بنائے۔

پاکستانی ہدف کے تعاقب  پروٹیز کی بیٹنگ شروع میں ہی لڑکھڑا گئی اور محمد عامر نے پہلے ہی اوور میں  ہاشم آملہ کو  2 رنز پر آوٴٹ کر دیا۔اس کے بعد کپتان ڈوپلیسی اور ڈی کوک نے محتاط انداز میں اننگز کو آگے بڑھایا اور 87 رنز کی پارٹنرشپ قائم کی تاہم 47 کے انفرادی اسکور پر ڈی کوک کیچ آؤٹ ہوگئے جب کہ 103 کے مجموعے پر شاداب خان نے مارکرم کو بولڈ کردیا۔ کپتان ڈوپلیسی کو محمد عامر نے 63 رنز پر چلتا کیا۔

پانچویں وکٹ پر ڈیوڈ ملر  اور وینڈر ڈوسن نے جم کر بیٹنگ کرتے ہوئے 53 رنز کی پارٹنر شپ قائم کی او ر مجموعے کو 189 تک پہنچایا مگر ایک بار پھر شاداب خان نے اس خطرے کو ٹالتے ہوئے ڈوسن کو پویلین کی راہ دکھا دی  جب کہ اگلے ہی اوور میں جارح مزاج ڈیوڈ ملر کو شاہین آفریدی نے بولڈ کردیا، جس کے بعد وہاب ریاض نے کرس مورس، رباڈا اور اینگنڈی کو آؤٹ کردیا، جنوبی افریقا مقررہ 50 اوورز میں 9 وکٹوں پر 248 رنز ہی بنا سکی۔

پاکستان کی جانب سے وہاب ریاض اور شاداب خان نے 3,3 وکٹیں لیں جبکہ محمد عامر اور شاہین آفریدی نے 2, 2 کھلاڑیوں کو واپس بھیجا۔ اس ہار کے ساتھ جنوبی افریقہ کی ٹیم کا ورلڈکپ میں سفر تمام ہو گیا ہے۔ وہ افغانستان کے بعد ورلڈکپ سے باہر ہونے والی دوسری ٹیم بن گئی ہے۔

تبصرہ کریں

Your email address will not be published.