عدالت مجھے اپنے رسک پر طلب کرے، یہ نہ ہو میری باتیں سن کر اپنا سے پیٹتے رہ جاوٴ، مریم نواز کی دھمکی

ویب ڈیسک ۔ نیب عدالت نے مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کو ایوان فیلڈ ریفرنس میں 19جولائی کر طلب کر لیا ہے۔ نیب عدالت میں طلبی کا نوٹس ملنے کے بعد مریم نواز ایک مرتبہ پھر غصے میں آگئیں اور نیب عدالت کو دھمکیاں لگانا شروع کر دیں۔ ساتھ ہی مریم نواز نے سوشل میڈیا پر عوام سے عدالت میں طلبی کے لئے رائے طلب کر لی۔

تفصیلات کے مطابق جعلی ٹرسٹ ڈیڈ کیس میں مریم نواز عدالت جانے سے پہلے ہی عدالت کو دھمکیاں دینا شروع کر دی ہیں۔ آج عدالت کی جانب سے طلبی کے بعد مریم نواز نے سوشل میڈیا کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ میری پریس کانفرنس میں تمام سازشیں بے نقاب ہونے کے بعد گھبراہٹ میں حکومت نے میرے خلاف ایک اور مقدمہ قائم کردیا ۔ میں عوام سے پوچھتی ہوں کہ میرے سوالات کے جواب ملنے کی بجائے کیا مجھےاس NAB

 

میں پیش ہونا چاہیئے جو آڈیو/ویڈیو کے زریعے یرغمال ہو؟ مریم نواز نے مزید کہا کہ آپ سے مشورہ چاہتی ہوں کہ مجھے ایک ثابت شدہ انتقام کے سامنے پیش ہونے کا بائیکاٹ کرنا چاہیئے یا پیش ہو کر NAB عدالت میں کھڑے ہو کر دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی کر دینا چاہئے ؟

ساتھ ہی مریم نواز نے دھمکی دیتے ہوئے کہا کہ بلانا ہے تو اپنے رسک پر بلانا! میری باتیں نا سن سکو گے نہ سہ سکو گے! یہ نا ہو کہ پھر سر پیٹتے رہ جاوٴ۔