حکومت مجھے ہر قیمت پر گرفتار یا نظر بند کرنا چاہتی ہے لیکن میں ان کا مقصد پورا نہیں ہونے دوں گی: مریم نواز

ویب ڈیسک – مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کو احتساب عدالت نے 19 جولائی کو جعلی ٹرسٹ ڈیڈ جمع کروانے کے الزام میں طلب کیا ہے۔ اور اس ضمن میں نیب نے پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز  کی طلبی کا نوٹس جاتی امرا میں بھیجا ہے جو کہ جاتی امراء میں موصول کر لیا گیا ہے۔ جس کے بعد امید ہے کہ مریم نواز عدالت میں ضرور پیش ہوں گی۔

مریم نواز نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ انہیں عدالت پیشی کے بعد گرفتار کر لیا جائے گا۔ ن لیگ کی نائب صدر نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر اپنے خدشے کا اظہار کرتے ہوئے کہا یہ مجھے ہر قیمت پر گرفتار یا نظر بند کرنا چاہتے ہیں مگر مسئلہ یہ ہے کہ میرے خلاف کچھ ہے نہیں اس لیے بیچاروں کو وہ جھوٹا کیس جس میں مجھے ایک بار سزا ہو چکی اور جس کو ہائی کورٹ معطل کر چکی دوبارہ کھولنا پڑا۔ یہ اقدام کیونکہ غیر قانونی اورمضحکہ خیز ہے اسلئے چلے گا نہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ میں پیش نا ہو کر ایک تو ان کو گرفتاری پلیٹ میں رکھ کر ان کا مقصد پورا نہیں ہونے دینا چاہتی دوسرا عدالت میں ناقابل تردید حقائق سامنے رکھنے اور سیلیکٹڈ کی آلہ کار نیب کی سیاہکاریوں کو عوام کے سامنے لانے کا موقع گنوانا نہیں چاہتی۔

یاد رہے کہ مریم نواز نے ایون فیلڈ ریفرنس میں جعلی ٹرسٹ ڈیڈ جمع کروائی تھی۔ جس پر انہیں سزا ہوئی لیکن اس سزا کو اسلام آباد ہائی کورٹ نے معطل کر دیا تھا۔