تبدیلی سرکار نے غریب عوام پر پیٹرول بم گرادیا، پیٹرول 5 روپے 15 پیسے فی لیٹر مہنگا

ویب ڈیسک ۔ تبدیلی کا نعرہ اور مقصد عوام کا تیل نکالنا، تحریک انصاف حکومت نے ایک مرتبہ پھر پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ کردیا۔ پیٹرولیم مصنوعات  میں ریکار ڈ اضافہ کرتے ہوئے پیٹرول کی قیمت میں 5روپے 15 پیسے اور ڈیزل کی قیمت میں 5روپے 65 پیسے فی لٹر اضافہ کر دیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق آئل اینڈ گیس ریگولیشن اتھارٹی (اوگرا) کی جانب سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی سمری حکومت کو بھجوائی گئی جسے حکومت نے بغیر کسی اعتراض کے قبول کرتے ہوئے غریب اور مہنگائی کی چکی میں پستی ہوئی عوام پیٹرول بم گرا دیا۔ جس کے بعد  پیٹرول کی قیمت میں 5 روپے 15 پیسے فی لیٹر اضافہ کیا گیا ہے ، اضافے کے ساتھ ہی پیٹرول کی نئی قیمت 117 روپے 83 پیسے فی لیٹر ہوگئی ہے۔

جبکہ دیگر پیٹرولیم مصنوعات میں  ہائی اسپیڈ ڈیزل 5 روپے 65 پیسے فی لیٹر مہنگا کردیا گیا ہے جس کی نئی قیمت 132 روپے 47 پیسے فی لیٹر، لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت فی لیٹر 8 روپے 90 پیسے اضافے کے بعد 90 روپے 52 پیسے جب کہ مٹی کے تیل کی نئی قیمت 5 روپے 38 پیسے فی لیٹر اضافے کے بعد 103 روپے 84 پیسے فی لیٹر مقرر کردی گئی ہے۔

حکومت کی جانب سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے پر اپوزیشن رہنماوٴں نے شدید رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ تبدیلی سرکار عوام سے جینے کا حق بھی چھیننا چاہتی ہے۔ قیمتوں میں ہوشربا اضافے سے ملک میں مہنگائی ایک طوفان آئے گا۔ حکومت فی الفور پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ واپس لے۔