اسرائیل شاہین تھری کے نشانے پر، بھارت کا کوئی ایڈوینچر یہودی ریاست کا آخری دن ہو گا، بڑا منصوبہ سامنے آ گیا

ویب ڈیسک ۔ پاکستان کے معروف دفاعی تجزیہ کار لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ غلام مصطفیٰ نے انکشاف کیا ہے کہ پاکستان اپنے خلاف ہونے والی کسی بھی کارووائی کا جواب بھارت کی دوست یہودی ریاست اسرائیل کو تباہ کر کے دے گا۔ انہوں نے انکشاف کیا کہ 27 فروری کی رات جب بھارت پاکستان ہر حملہ کرنے والا تھا تب پاکستان نے اپنے شاہین تھری میزائل کا رخ اسرائیل کی جانب سے کر دیا تھا۔ اگلے ہی روز پوری دنیا حرکت میں آئی اور اسرائیل کو بچایا۔

دفاعی تجزیہ کار نے نجی ٹی وی پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کا شاہین تھری میزائیل آواز کی رفتار سے 18گنا تیز رفتار سے پرواز کرتا ہے اور وہ صرف 12منٹ میں اسرائیل کے دارالحکومت تل ابیب کو نیست و نابوت کر سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں جو حملہ کیا گیا،وہ کابل میں منصوبہ بنا تھا، اس میں خفیہ ایجنسی رااور اسرائیل بھی شامل تھا، اس میں ایک بڑی طاقت بھی شامل تھی۔ کیا وہ طالبان کو ختم کرنے آئے تھے؟ مجھے نہیں پتا کہ ہماری لیڈرشپ اور حکومت احمقوں کی جنت میں رہتی ہے۔

لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ غلام مصطفیٰ نے کہا کہ 27فروری کو پاکستان پر حملے میں بھارتی ابھی نندن اور دوسرا پائلٹ اسرائیلی تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ میں اس بات کو کنفرم تو نہیں کر سکتا لیکن ذاتی طور پر مجھےکوئی شک نہیں کہ دوسرے پائلٹ کا تعلق اسرائیل سے ہی تھی۔ پاکستان کے خلاف تیار کی جانے والی ہر سازش میں اسرائیل بھارت کے ساتھ ہوتا ہے۔ پاکستان حملے کا منصوبہ بھی بھارت اور اسرائیل نے کابل میں بیٹھ کر بنایا تھا۔