پاکستان اور بھارت کے درمیان کسی بھی وقت جوہری جنگ ہو سکتی ہے: عمران خان

ویب ڈیسک ۔ وزیراعظم عمران خان نے عالمی برادری کو خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی فاشسٹ حکومت کے غیر ذمہ دارانہ رویے کی وجہ سے جنوبی ایشیا میں کسی بھی وقت جنگ چھڑ سکتی ہے جو پورے خطے کو اپنی لپیٹ میں لے لے گی۔

تفصیلات کے مطابق امریکی جریدے کو دیئے ایک انٹرویو میں وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان مذاکرات کا امکان نہ ہونے کے برابر ہے جبکہ بھارت میں فاشسٹ حکومت کے ہوتے خطے میں ایک بڑی جنگ کے خطرات منڈلا رہے ہیں ہے۔ عمران خان نے کہا کہ پاکستان کی جانب سے کئی بار دوستی کا ہاتھ بڑھانے کے باوجود مودی حکومت نے ہمیشہ منفی جواب دیا تاہم اب مذاکرات کا وقت ختم ہو چکا ہے۔

اپنے انٹرویو میں وزیراعظم پاکستان نے کہا کہ بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی کا سلسلہ جاری ہے، مودی کی سرپرستی میں بھارتی فوج کسی بھی وقت کشمیر میں کشمیری مسلمانوں کی نسل کشی شروع کر سکتی ہے۔ اس وقت کشمیر ایک جیل کی صورت اختیار کر چکا ہے اور وہاں موجود ایک کروڑ کے قریب مسلمانوں کی زندگیوں کو شدید خطرات لاحق ہیں۔

عمران خان نے عالمی برادری کو خبردار کرتے ہوئے کہا ہے پاکستان اور بھارت دونوں جوہری قوتیں ہیں اور بھارت کی جانب سے چھیڑ چھاڑ ایک بڑی جنگ کا پیش خیمہ ہے۔ پاکستان بھارت کی جانب سے کسی بھی جارحیت کا بھرپور جواب دے گا۔ انہوں نے کہا کہ خطے میں ہونے والی جنگ پوری دنیا کو اپنی لپیٹ میں لے سکتی ہے۔