ارمیلا کو کشمیریوں کے حق میں آواز اٹھانا مہنگا پڑ گیا

ویب ڈیسک ۔ بالی وڈ کی ماضی کی بڑی اداکارہ ارمیلا مٹونڈکر کو مقوضہ کشمیر کے مسلمانوں کے حق میں آواز اٹھانا مہنگا پڑ گیا، ارمیلا کو ان کے اپنے ہی ملک میں غدار قرار دےد یا گیا۔

تفصیلات کے مطابق بالی ووڈ اداکارہ اور کانگریس کی رکن ارمیلا ماتونڈکر مقبوضہ کشمیر میں مکمل لاک ڈاؤن کرنے اور مظلوم کشمیریوں کے ساتھ غیر انسانی سلوک کرنے پر مودی سرکار کے مظالم کے خلاف بھرپور آواز اٹھائی جو کہ بھارتی ہندو انتہا پسند جماعت کو بالکل پسند نہ آئی اور ارمیلا کو غداری کا مرتکب قرار دے دیا۔

ارمیلانے دوروز قبل سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر مقبوضہ کشمیر میں ہفتوں سے جاری کرفیو اورلاک ڈاؤن کے خلاف آواز اٹھاتے ہوئے مودی حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بنایاتھا۔ جب کہ ا س سے قبل انہوں نے اپنے ٹوئٹ میں بھی مودی سرکار کو بے نقاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ حکومت مقبوضہ جموں کشمیر میں سب کچھ اچھا ہے دکھانے کی بھرپور کوشش کررہی ہے، لیکن آرٹیکل 370 کی منسوخی کے ساتھ کشمیر کے بہتر مستقبل کی باتیں، مقامی افراد اور کشمیری قیادت پر تشدد کب ختم ہوگا؟۔