پولیس حراست میں ہلاک ہونے والے صلاح الدین کی موت کے بعد تصاویر منظر عام پر، مقتول پر خوفناک تشدد کیا گیا

ویب ڈیسک ۔ پولیس تشدد سے ہلاک ہونے والے صلاح الدین کی موت کے بعد پوسٹ مارٹم کی تصاویر سامنے آگئی ہیں۔ مقتول صلاح الدین کے جسم پر پولیس کی درندگی کے نشانات واضح نظر آرہے ہیں۔ صلاح الدین کے جس کا کوئی حصہ ایسا نہیں تھا جس پر تشدد نہ کیا گیا ہو۔

یاد رہے کہ چند روز قبل رحیم یار خان کی پولیس نے اے ٹی ایم اکھاڑ کر کارڈ نکالنے والے  ایک ملزم کو اس وقت گرفتار کیا جب اس کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی۔ صلاح نامی ملزم شہر کی مختلف اے ٹی ایم مشینوں کو اکھاڑ کر ان میں سے کارڈ نکالتا تھا اور بعد ازاں اے ٹی ایم بوتھ میں لگے کیمروں کو دیکھ کو الٹی سیدھی شکلیں بھی بنایا تھا۔

پولیس تشدد سے صلاح الدین جیل میں ہی جاں بحق ہو گیا تھا جبکہ پولیس نے روایتی ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ صلاح الدین دل کا دورہ پڑنے سے ہلاک ہوا ہے تاہم اب وائرل ہونے والی تصاویر نے پولیس کا پول کھول دیا ہے۔