7ارب کے بانڈ جمع کرائیں ،4 ہفتوں کی آزادی پائیں، نواز شریف کو لندن جانے کی مشروط اجازت مل گئی

اسلام آباد( ڈیسک) وفاقی وزیر قانون اور انصاف ڈاکٹر فروغ نسیم نے نواز شریف کو بیرون ملک سفر کی مشروط اجازت دیتے ہوئے کہا ہے کہ  نواز شیریف یا شہباز شریف 7 ارب روپے کے ایمنسٹی بانڈ جمع کرا ئیں تو چار ہفتوں کے لیے وہ لندن جا سکتے ہیں۔ایمنسٹی بانڈ جمع کرانے پر ہی ایڈیشنل سکریٹری وزارت داخلہ کارروائی آگے بڑھائیں گے۔

شیورٹی بانڈز کا مقصد ہے کہ ناوز شریف علاج کے بعد ملک واپس آجائیں گے۔ان کی طبیعت نہ سنھلی تو بیرون ملک قیام میں توسیع مدت کی درخواست دے سکتے ہیں۔ وزیر اعظم عمران خان معاون خصوصی  شہزاد اکبر کے ساتھ نیوز کانفرنس کرتے ہوئےوزیر قانون نے کہا کہ وفاقی حکومت آج فیصلہ جاری کر دے گی ،آگے ان کی مرضی جائیں یا نہ جائیں۔اس موقع پر شہزاد اکبر نے واضح کیا کہ سزا یافتہ مجرم ای سی ایل سے نہیں نکالا جاتا ،یہ ایک بار کی اجازت ہے۔

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں وفاقی وزیر قانون فروغ نسیم نے پریس کانفرنس کے دوران بتایا کہ میاں نواز شریف کو چار ہفتوں کیلئے بیرون ملک جانے کی اجازت دی ہے۔ انھیں صحت کے بڑے مسائل درپیش ہیں، ان کے دل کا آپریشن بھی ہو چکا ہے۔ انہوں نے کہا کہ میڈیکل رپورٹس کے مطابق نواز شریف کے پلیٹ لیٹس کی تعداد 25 سے 30 ہزار تک ہے۔

اپنی پریس کانفرنس میں بیرسٹر فروغ نسیم نے واضح کیا کہ ایک مرتبہ اجازت دینے کا مقصد ای سی ایل سے مستقل نام نہیں نکالنا ہوتا، پہلے بھی کئی ملزمان کوایک وقت کی اجازت مل چکی ہے آج ہی اس کا اجازت نامہ جاری کردیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ  نواز یا شہباز شریف کو 7 ارب روپے کے سیکیورٹی بانڈ جمع کرانا ہوں گے۔