کلبھوشن کی خاطرآرمی ایکٹ میں کوئی ترمیم نہیں کی جا رہی، ڈی جی آئی ایس پی آر کا دو ٹوک اعلان

ویب ڈیسک ۔ آج دن بھر ایک افواہ ملک بھر کے میڈیا میں گردش کر رہی تھی جس کے مطابق یہ کہا جا رہا تھا کہ پاکستان میں قید بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کو اپیل کا حق دینے کے آرمی ایکٹ میں ترمیم کی جا رہی ہے۔ تاہم ڈی جی آئی ایس پی آر نے ایسی کسی بھی اقدام کی سختی سے تردید کر دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاک فوج کے ترجمان میجر جنرل آصف غفور نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ایک ٹویٹ میں اس معاملے کی وضاحت  کرتے ہوئے کہا کہ  آرمی ایکٹ میں ترمیم کی قیاس آرائیاں غلط ہیں۔ کمانڈر کلبھوشن یادیو کے حوالے سے چند آپشنز زیر غور ہیں۔ اس حوالے سے جو بھی فیصلہ ہو گا اس کا اعلان منساب وقت پر کر دیا جائے گا۔

اس سے قبل آج دن بھر پاکستانی میڈیا میں یہ خبر گردش کر رہی تھی کہ پاکستان نے بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کو اپیل کا حق دینے کے لیے آرمی ایکٹ میں ترمیم کا فیصلہ کر لیا ہے جس کے بعد وہ اپنی سزا کے خلاف پاکستان کی سول عدالتوں میں اپنی سزا کے خلاف اپیل دائر کرنے کا حق رکھ سکے گا۔

https://dailynewslounge.com/2019/11/13/15734/