سعودی عرب کا عید کی چھٹیوں میں 24گھنٹے کرفیو کااعلان

ریاض(ویب ڈیسک) سعودی عرب میں کورونا وائرس کے پھیلائو کو روکنے کے لئے عید الفطر کی چھٹیوں میں (23 سے 27 مئی) تک پورے ملک میں کرفیو نافذ کیا جائے گا۔سعودی وزارت داخلہ کے مطابق مکہ المکرمہ کے علاوہ باقی ملک میں صبح 9 سے شام 5 بجے تک آزانہ تجاری سرگرمیاں جاری رہیں گی۔

اس سے پہلے سعودی عرب کے جزان شہر میں بھی 24 گھنٹوں کیلئے کرفیو نافذ کیا جا چکا ہے۔

سعودی وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ لوگ صبح9 سے شام 5 بجے تک اشیائے خورونوش اور ادویات کی خریداری کیلئے گھروں سے باہر نکل سکیں گے۔دوسری جانب سعودی عرب میں اب تک 15 ہزارسے زائد کورونا کیسز سامنے آچکے ہیں۔

وزیر داخلہ نے یہ بھی بتایا کہ سعودی عرب میں ایک روز میں سب سے زیادہ 2520 افراد کورونا وائرس سے صحتیاب ہو کر گھروں کو لوٹے ہیں،مگر سعودی وزارت صحت کے ترجمان ڈاکٹر محمد العبدعلی نے فی الحالی اجتماعات کے باز رہنے کا ہی کہا ہے۔

سعودی عرب میں اب تک کورونا وائرس کے 42ہزار925 کیس سامنے آ چکے ہیں جن میں سے 27 ہزار 404 ابھی بھی کورونا کے شکار ہیں جبکہ 264 افراد کورونا وائرس سے جاں بحق ہوچکے ہیں جن میں سعودی باشندے اور دوسرے ممالک کے افراد بھی شامل ہیں، ہسپتالوں میں 147 افراد ابھی بھی تشویشناک حالت میں زیر علاج ہیں۔

کنگ عبد العزیز سٹی برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کےماہرین نے شہریوں کی نقل و حرکت پر نظر رکھنے کیلئے ایک حکمت عملی پر مشتمل نمونہ تیار کر لیا ہے جس میں مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے ماہرین نے اپنے رائے شامل کی ہے، اس نمونے کے مطابق احتیاطی تدابیر پر عمل پیرا ہوکر شہریوں کو نقل و حرکت میں محدود آزادی دینے کا پلان بھی شامل ہے۔