معروف اداکارہ روبینہ اشرف کورونا وائرس سے مکمل صحت یابی کے بعد گھر منتقل

پاکستان ڈرامہ انڈسٹری کی معروف اداکارہ روبینہ اشرف کورونا وائرس سے مکمل صحت یابی کے بعد اب اپنے گھر منتقل ہوگئیں۔

روبینہ اشرف کی بیٹی منیٰ طارق نے اپنے انسٹاگرام اکاؤنٹ پر پوسٹ شیئر کی جس میں انہوں نے والدہ کے گھر آنے کی خوشی میں اپنے گھر کو سجایا ہوا تھا۔

View this post on Instagram

To the smile i thought ill never be able to see again, the hands I thought ill never get to kiss again. My beloved amma fought for a month and came back to us, each day I prayed to Allah to give me the most precious thing back, looking at how each day she would fight back to come to us was the most beautiful feeling. This time not only taught me to care for her more, but to know i am nothing without her. This picture and post is mostly to thank all the people who prayed for her, her fans who always messaged and asked about her and wished her well. Please keep her in your prayers. We love you too bits🙏 Special thanks to @samanjumm for capturing these beautiful moments and Nida @bazzlepk for putting this beautiful setup for us 💗🤗

A post shared by Minna Rubina Tariq (@minnatariq) on

منیٰ طارق نے اپنی والدہ کے ساتھ تصویر بھی شیئر کی جس پر انہوں نے لکھا کہ ’یہ سب اس مسکان کے لیے جس کے بارے میں، میں نے سوچا تھا کہ شاید میں اسے کبھی نہ دیکھ پاؤں اور ان ہاتھوں کے لیے جن کے بارے میں، میں نے سوچا کہ میں انھیں شاید اب کبھی نہ چوم پاؤں‘۔

منیٰ طارق نے والدہ کے ساتھ تصویر کے کیپشن میں مزید لکھا کہ ’میری والدہ جو ایک ماہ تک کورونا وائرس میں مبتلا رہیں، آج یہ صحت یاب ہوکر  دوبارہ ہمارے درمیان موجود ہیں‘۔

منیٰ طارق کا کہنا تھا کہ ’میں نے روزانہ اللّٰہ تعالیٰ سے دعا کی کہ وہ مجھے میری سب سے بہترین چیز دوبارہ لوٹا دیں، اس وقت نے مجھے نہ صرف یہ سکھایا کہ میں ان کا زیادہ خیال رکھوں بلکہ اس نے مجھے یہ احساس بھی کروادیا کہ میں ان کے بغیر کچھ بھی نہیں‘۔

خیال رہے کہ اداکارہ روبینہ اشرف میں گزشتہ دنوں کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی تھی  جب کہ سوشل میڈیا پر ان کی طبیعت بگڑنے کے حوالے سے افواہیں بھی گردش کرنے لگی تھیں۔

بعد ازاں اداکارہ روبینہ اشرف کی بیٹی منیٰ طارق نے افواہوں کو مسترد کردیا تھا۔