موٹروے زیادتی کیس، ملزمان عابد ملہی اور شفقت کو سزائے موت

ویب ڈیسک: لاہور سیالکوٹ موٹروے زیادتی کیس کے مرکزی ملزمان کو عدالت نے سزائے موت سنادی۔ ملزمان نے رات کے اندھیرے میں بچوں کے سامنے ان کی والدہ کے ساتھ اجتماعی زیادتی کی تھی۔

تفصیلات کے مطابق لاہور کی انسداد دہشت گردی کی عدالت نے سنیچر کو موٹروے گینگ ریپ کیس کے دو ملزمان عابد ملہی اور شفقت بگا کو ایک ایک بار سزائے موت اور ایک ایک بار عمر قید کی سزا سنا دی۔  ملزمان عابد ملہی اور شفقت بگا کو ایک ایک بار سزائے موت اور ایک ایک بار عمر قید کا بھی حکم دیا۔

مقدمے کے ٹرائل کے دوران عدالت نے 37 گواہوں کے بیانات قلمبند کیے جو پراسیکیوشن کی جانب سے پیش کیے گئے۔ ان گواہان میں متاثرہ خاتون اور مقدمہ مدعی کا بیان بھی شامل ہے۔ یاد رہے کہ

گزشتہ برس  گوجرانوالہ کی رہائشی ثنا نامی خاتون اپنی بہن سے ملنے کے لیے لاہور آئی تھیں۔ واپسی کے دوران ثنا کی کار کا پیٹرول ختم ہوگیا۔ تب ہی دونوں ملزمان نے نے خاتون کو اس کے بچوں کے سامنے زیادتی کا نشانہ بنایا ۔ بعد ازاں خاتون کی حالت غیر ہونے پر دونوں خاتون کو وہیں پر چھوڑ کر فرار ہوگئے۔ ڈاکو خاتون سے ایک لاکھ نقدی ، 2 تولے طلائی زیورات، ایک عدد برسلیٹ، گاڑی کا رجسٹریشن کارڈ اور 3 اے ٹی ایم کارڈز لے کر فرار ہو گئے۔

تبصرہ کریں

Your email address will not be published.