جب تک کشمیر کی آئینی حیثیت بحال نہیں ہوتی بھارت سے تجارت نہیں ہو گی: عمران خان کا یو ٹرن

ویب ڈیسک: پڑوسی ملک بھارت کے ساتھ تعلقات کی بحالی پر وزیراعظم عمران خان نے ایک بار پھر بڑا یو ٹرین لے لیا، کہتے ہیں مقبوضہ کشمیر کی آئینی حیثیت کی بحالی تک بھارت کے ساتھ کسی قسم کی تجارت نہیں ہو سکتی۔

تفصیلات کے مطابق  وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر کی آئینی حیثیت بحال ہونے تک بھارت سے تجارت نہیں ہوسکتی ہے۔ آج اسلام آباد میں وزیراعظم کی زیرصدارت بھارت کے ساتھ تجارتی روابط سے متعلق مشاورتی اجلاس ہوا جس میں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور وزارت خارجہ کے اعلیٰ حکام شریک ہوئے۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ جب تک بھارت مقبوضہ کشمیر کی آئینی حیثیت بحال نہیں کرتا اس کے ساتھ کسی قسم کی تجارت نہیں کی جائے گی۔ وزیراعظم نے کہا یہ انتہائی غلط تاثر جائے گا کہ ہم کشمیر کو نظر انداز کرکے بھارت سے تجارت شروع کریں، کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیے بغیر بھارت کے ساتھ تعلقات نارمل نہیں ہوسکتے ۔

یاد رہے کہ چند روز قبل بھارت سے کپاس اور چینی کی امپورٹ کا فیصلہ کیا گیا تھا جس کے بعد حکومت کو خاصی تنقید کا نشانہ بنایا گیا تھا تاہم تنقید کے بعد حکومت کو اپنا فیصلہ واپس لینا پڑا۔